صفحۂ اول    ہمارے بارے میں    ہمارا رابطہ
پیر 23 جولائی 2018 

ووٹ کوعزت دو لیکن چور کو نہیں، عمران خان

آن لائن | جمعرات 12 جولائی 2018 

 اسلام آباد( آن لائن ) پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کہا ہے کہ شکست (ن) لیگ کا مقدر بن چکی ہے اور تحریک انصاف اقتدار میں آکر کرپشن کا خاتمہ کرے گی۔اسلام آباد میں اقلیتی کنونشن سے خطاب کے دوران عمران خان نے کہا کہ قائداعظم کا پاکستان ایک فلاحی ریاست تھی، مدینہ کی فلاحی ریاست میں اقلیتوں کو بھی حقوق حاصل تھے، غریبوں کو بنیادی حقوق دینا ریاست کی ذمے داری ہے، آزاد معاشرے میں قانون غریب کو امیر سے طاقتور کردیتا ہے، مہذب معاشرے میں بیروزگاروں کو فنڈز دیے جاتے ہیں۔پاکستان کے آئین کا تمام ابتدائیہ حقوق سے متعلق ہے لیکن پاکستان میں کمزور طبقے کو حقوق نہیں ملتے کیوں کہ قانون کی بالادستی نہیں ہوتی تو کمزورکو نقصان اٹھاناپڑتا ہے، غریب کو انصاف دینے کیلئے ملک کے پاس وسائل نہیں، تعلیم ہر بچے کا بنیادی حق ہے جو کہ اس ملک میں نہیں دیا گیا۔ڈھائی کروڑ بچے اسکول ہی نہیں جاتے۔ ملک میں 45 فیصد بچے غذائی قلت کی وجہ سے بیمارہیں۔۔عمران خان نے کہا کہ مغرب میں منی لانڈرنگ کرنے والا لوگوں میں جانے کی جرات نہیں کرتا لیکن یہاں 300 ارب روپے کی منی لانڈرنگ کرنے والا معصوم بنا ہوا ہے، ایک مجرم پکڑا گیااور وہ کہتا ہے کہ واپسی پر میرا استقبال کرو، شکست (ن) لیگ کا مقدر بن چکی ہے، تحریک انصاف اقتدار میں آکر کرپشن کا خاتمہ کرے گی۔ یہ حکومت کی ذمہ دری ہے کہ وہ اپنے شہریوں کو انصاف' تعلیم اور صحت کی سہولیات فراہم کرے تعلیم حاصل کرنا ہر بچے کا بنیادی حق ہے اور تعلیم کا حق ملنا کہ وہ معاشرے میں آگے آئے اور 45 فیصد بچے ذہن نہ بڑھنے کی بیماری میں مبتلا ہیں اور ملک میں سب سے زیادہ عورتیں ڈیلوری کے وقت مرتی ہیں اس کا مطلب ہے کہ ہم عورتوں کو بنیادی صحت جیسی بنیادی سہولیات نہیں دے سکتے یہ حکومت کی ذمہ داری ہے کہ وہ شہریوں کو بنیادی سہولیات دے انہوں نے کہا کہ 80 فیصد آبادی انصاف نہیں حاصل کر سکتی۔ اگر طاقتور ظلم کرتا ہے تو کمزور کے پاس وسائل ہی نہیں کہ وہ انصاف کیلئے عدالتوں میں جائے۔ انہوں نے کہا کہ جب ہم قائد اعظم کے پاس کی بات کرتے ہیں تو وہ اسلامی فلاحی ریاست تھی اور ویلفیئر ریاست کی یہ بنیادی ذمہ داری ہوتی ہے کہ وہ سب کو برابر انصاف فراہم کرے۔ اگر قانون نہ ہو تو کمزور طبقہ مارا جاتا ہے اور قانون ہو تو سب کو انصاف ملتا ہے اور قانون آزاد کرتا ہے۔ ۔ ریمنڈ ڈیوس نے دن دیہاڑے دو لوگوں کو گولی ماری وہ مسلمان نہیں تھا اور پاکستان کا قانون اس کا کچھ نہیں کرسکا۔ ایک امریکی نے سگنل توڑتے ہویء نوجوانوں کی ٹانگیں توڑ دیںاور شراب کے نشے مین روندتا گیا لیکن پاکستانی قانون اس کا کچھ نہیں کر سکا۔ اگر مغرب میں ہوتا تو جیل میں ڈال دیا جاتا۔ ہمارے ملک کا مسئلہ یہ ہے کہ طاقتور کیلئے اور قانون ہے اور کمزور کی لئے اور یہ اس ملک کا المیہ ہے ۔ نبی اکرم ۖ نے فرمایا کہ بڑی قومیں تباہ ہوئی ہیں جب برابر کا انصاف نہ ہو تو سول سوسائٹی وہ ہوتی ہے جس میں قانون کی بالادستی ہو۔ انہوں نے کہا کہ پارٹی کا نام ہی تحریک انصاف رکھا ہے جس کا مطلب ہے سب کیلئے برابر قانون اور انصاف ہے۔ انہوں نے کہا کہ بنی میوئل بہت بڑا امریکی ڈان تھا اور اربوں کھربوں پتی تھا۔ اس کا فراڈ پکڑا گیا تو سب سے پہلے اس کے دوست اس کو چھوڑ کر چلے گئے ۔ بیوی نے کہ اکہ میں تیری شکل نہیں دیکھنا چاہتی ۔ ایک بیٹے نے شرم کے مارے خود کشی کرلیا ور دوسرا ٹینشن لے کر بیمار ہوا اور مر گیا اور اس پر امریکہ میں فلم بھی بنی۔ لیکن ہمارے ایک آدمی تین سو ارب کی کرپشن میں پکڑا گیا اور اب وہ معصوم بنا ہوا ہے اور اس کیلئے لاہور میں بڑی ریلی نکالیں گے کہ وزیراعظم آرہا ہے اور کہے گا کہ میں بڑا تیس مار خان ہوں اور ہاتھ ہلا کر کہے گا کہ میرا استقبال کرو اور میں کتنا بڑا ڈاکو ہوں۔ یہ تب ہوتا ہے جب قانون کی بالادستی نہ ہو۔ عمران خان نے کہا کہ میں 22 سال لندن پڑھتا اور کرکٹ کھیلتا رہا ہوں ۔ وہاں کوئی وزیراعظموزیر یا پارلیمنٹ کا نمائندہ منی لانڈرنگ میں پکڑا جائے تو وہ سوچ نہیں سکتا کہ ووٹ مانگے یا انٹرویو دینے جائوں گا۔ وہاں عوام اس کے خلاف کھڑے ہوتے ہیں اور میڈیا ہ اس کو اڑا کے رکھ دیتا ہے عوام انڈے مارتے ہیں اور اس کی جرات نہیں ہوتی عوام کا سامنا کرے لندن میں انصاف ' تعلیم صحت سب کیلئے مفت ہوتی ہے۔ اور بے روزگار کیلئے بے روزگاری وظائف جاری کئے جاتے ہیں عدالتوں میں مفت وکیل حکومت کرکے دیتی ہے اور معذور کو ہر قسم کی سہولت دی جاتی ہے وہاں پر اگر کتا بھی سڑک پر آجائے تو اس کو پناہ دی جاتی ہے اور کتے کے ساتھ ظلم کرنے والے کو سزا دی جاتی ہے۔

ہمارے بارے میں جاننے کے لئے نیچے دئیے گئے لنکس پر کلک کیجئے۔

ہمارے بارے میں   |   ضابطہ اخلاق   |   اشتہارات   |   ہم سے رابطہ کیجئے
© 2018 All Rights of Publications are Reserved by Daily Subh.
Developed by: SuperWebz.com
تمام مواد کے جملہ حقوق محفوظ ہیں © 2018 روزنامہ صبح۔