صفحۂ اول    ہمارے بارے میں    ہمارا رابطہ
جمعہ 17 اگست 2018 
  • آئی ایس آئی فنڈ کا غلط استعمال ، اسلم بیگ کے خلاف کارروائی شروع
  • پنجاب کے علاوہ ملک بھر میں حکومت سازی کا پہلا مرحلہ مکمل
  • حکومت ہی دہشتگردوں کی ہے میاں افتخار حسین
  • یوم آزادی آج جوش وخروش سے منایا جائیگا
  • عمران خان پہلی مرتبہ سرکاری پروٹوکول میں قومی اسمبلی آئے
  • پرویز خٹک کو مجلس عمل سے رابطوں کا ٹاسک حوالے

نواز شریف کے دست دراست بیورو کریٹ کی 5 ارب روپے مالیت پلازہ کا انکشاف

آن لائن | پیر 23 جولائی 2018 

 اسلام آباد(آن لائن) کرپشن اور بریانتی پر نااہل ہوانے والے سابق وزیر اعظم نواز شریف کے پرنسپل سیکرٹری فواد حسن فواد راولپنڈی صدر میں کرپشن سے بنائے گئے پلازہ کی منی ٹریل نیب حکام کو دینے میں ناکام ہو گئے ہیں ، فواد حسن فواد نے بطور پرنسپل سیکرٹری راولپنڈی صدر میں بھائی کے نام پر پلازہ تعمیر کرایا تھا، جس کی مارکیٹ ویلیو5ارب روپے سے بھی زائد ہے، نیب حکام نے گرفتار فواد حسن فواد سے اس پلازہ کی بابت منی ٹریل طلب کی تھی لیکن منی ٹریل دینے میں مکمل ناکام ہو گئے ہیں ، ذرائع نے آن لائن کو بتایا کہ ابتدائی تحقیقات میں یہ ثابت ہوا ہے کہ فواد حسن فواد نے سرکاری عہدے کا ناجائز فائدہ اٹھایا اور اپنی آمدن سے زائد اثاثے بنائے اور ان کی مالیت اب اربوں روپے میں ہے، فواد حسن فواد کو نیب نے آشیانہ ہاؤسنگ سکیم سکینڈل میں گرفتار کر رکھا ہے لیکن جب اس کی سخت تحقیقات ہوئیںتو فواد نے راولپنڈی پلازہ کی حقیقت کے بارے میں بھی نیب حکام کو آگاہ کر دیا، نواز شریف کی ملی بھگت سے فواد حسن فواد نے 5سالہ دور حکومت میں بھاری کرپشن کی ہے اور دیگر سکینڈلز کے علاوہ فواد حسن فواد پر پلازہ سکینڈل بارے بھی ریفرنس دائر کیا جائے گا اور یہ ریفرنس نیب جلد احتساب عدالت میں دائر ہو گا، اس حوالے سے فواد حسن فواد سے تمام متعلقہ تحقیقات مکمل کر لی گئی ہیں جب کہ اس سکینڈل میں فواد حسن فواد کے دیگر رشتہ داروں کو بھی گرفتار کیا جا سکتا ہے۔

ہمارے بارے میں جاننے کے لئے نیچے دئیے گئے لنکس پر کلک کیجئے۔

ہمارے بارے میں   |   ضابطہ اخلاق   |   اشتہارات   |   ہم سے رابطہ کیجئے
© 2018 All Rights of Publications are Reserved by Daily Subh.
Developed by: SuperWebz.com
تمام مواد کے جملہ حقوق محفوظ ہیں © 2018 روزنامہ صبح۔